بڑی خبر پاکستان بھی اسرائیل اور فلسطین کی جنگ میں اتر پڑا

پاکستان کی فلسطین پر اسرائیلی حملوں کی شدید مذمت غزہ میں فلسطینیوں پر غیر انسانی بمباری فوری طور پر روکنے کا مطالبہ کر دیا۔ ترجمان دفتر خارجہ کہتی ہیں پابندیاں اٹھا کر فلسطینیوں کا حق خود ارادیت تسلیم کیا جائے۔ اسلام آباد سے سمیرا خان کی رپورٹ میں دیکھیے۔

اسرائیل کی جانب سے غزہ کے معصوم شہریوں پر مسلسل بمباری۔ طاقت کے وحشیانہ استعمال پر پاکستان نے شدید تشویش کا اظہار کر دیا۔ ترجمان دفتر خارجہ نے غزہ پر پابندیوں اور civilians پر کو international قوانین کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے عالمی برادری سے notes لینے کی اپیل کر دی ہفتہ وار نیوز briefing میں ترجمان دفتر خارجہ ممتاز زاہرہ بلوچ کا کہنا تھا

کہ پاکستان فلسطین cause کا مضبوط حامی ہے وفاقی کابینہ نے بھی اسرائیلی جارحیت کی مذمت کی ہے او آئی سی کا خصوصی اجلاس بلانے کے لیے بھی کوشش کر رہے ہیں عالمی برادری پاکستان کے ساتھ مل کر غزہ میں ceasefire پر کام کرے امید ہے کہ اسرائیل عرب league کے مطالبات پر سے غور کرے گا ترجمان نے واضح کیا کہ پاکستان کا غیر قانونی افغان مہاجرین یا دیگر باشندوں کو واپس بھیجنا قومی مفاد میں ہے یکم نومبر سے غیر قانونی باشندوں اور مہاجرین کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی کالعدم اور دہشت گرد تنظیموں کے خلاف کاروائی پر افغان حکومت کی کوششوں کا خیر مقدم کریں گے ممتاز زہرا بلوچ نے بتایا کہ کرکٹ match دیکھنے کے لیے پاکستانی صحافیوں اور شائقین کو ویزے جاری کرنے پر بھارت رابطے میں ہیں۔

انہوں نے پاکستانی صحافی زینب عباس کے خلاف ٹویٹ کی بنیاد پر بے جا case کو غلط اقدام قرار دیا۔ ترجمان نے مطالبہ کیا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں سیاسی سرگرمیوں سے پابندی اٹھائے اور کشمیری سیاسی قیادت کو فوری رہا کرے۔

Scroll to Top